ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے سابق سربراہ کی خوفناک وارننگ

1918ء جیسی خوفناک آفت کا خطرہ، 8 کروڑ انسان مارے جائیں‌ گے: ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے سابق سربراہ کی خوفناک وارننگ

نیویارک(بول پاکستان رپورٹ) ایک صدی قبل 1918ء میں فلو کی طرح کی ایک وباء دنیا میں پھیلی تھی جس نے 5 کروڑ انسانوں کو نگل لیا تھا۔ میل آن لائن کے مطابق اب ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے سابق سربراہ نے اس سے بھی زیادہ خوفناک وباء پھیلنے کی وارننگ جاری کر دی ہے۔ اس وباء کے متعلق ان کا کہنا ہے کہ یہ اس قدر خوفناک ہو گی کہ دنوں میں 8 کروڑ سے زائد لوگ لقمہ اجل بن جائیں گے۔ یہ بھی فلو کی طرح کی وباء ہو گی جو ان کے مطابق اس تیزی سے پھیلے گی کہ محض 36 گھنٹوں میں پوری دنیا کو اپنی لپیٹ میں لے لے گی۔

یہ بھی پڑھیں:‌ اگلی ویڈیو کہاں سے لیک ہو گی اور اس کا ماسٹرمائنڈ کون ہو گا؟ سینئر صحافی حسن نثار نے تہلکہ خیز دعویٰ کر دیا

ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے سابق سربراہ کی قیادت میں ‘ دی گلوبل پری پیئریشن مانیٹرنگ بورڈ’ کے ماہرین نے ایک رپورٹ تیار کی ہے جس میں یہ ہولناک انکشاف کیا گیا ہے۔ اس رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ لگ بھگ ایک صدی قبل سپینش فلو پینڈیمک نامی وباء نے ایک تہائی دنیا کو اپنی لپیٹ میں لے لیا تھا اور 5 کروڑ لوگ موت کے گھاٹ اتر گئے تھے۔ اب یہ نئی بیماری اس سے کہیں زیادہ تیزی کے ساتھ دنیا میں پھیل سکتی ہے اور مستقبل قریب میں اس کے پھیلنے کا غالب امکان ہے۔ اگر یہ وباء پھیلی تو ایک صدی قبل آنے والی اس وباء سے کہیں زیادہ ہلاکتیں ہوں گی۔

یہ بھی پڑھیں:‌ غریب ماں‌ دودھ کا انتظام نہ کر سکی، تین دن کے بھوکے 8 ماہ کے بیٹے کو گلہ گھونٹ کر مار ڈالا

گروپ نے اپنی ‘اے ورلڈ ایٹ رِسک’ نامی تحقیقاتی رپورٹ میں مزید بتایا ہے کہ “یہ خطرہ فرضی نہیں، حقیقی ہے اور دنیا کو اسے انتہائی سنجیدگی سے لینا ہو گا۔ یہ وباء پھیلی تو کم از کم 8 کروڑ سے زائد لوگ جان سے جائیں گے اور دنیا کی معیشت اس سے وباء کے باعث تباہ ہو جائے گی۔” دیگر عالمی ماہرین کا بھی اس رپورٹ کے حوالے سے کہنا ہے کہ “دی گلوبل پری پیئریشن مانیٹرنگ بورڈ کے ماہرین کی رپورٹ چشم کشا ہے۔ بدقسمتی سے اس رپورٹ پر عالمی رہنماؤں کی طرف سے جس طرح کا ردعمل آنا چاہیے تھا وہ نہیں آیا۔ اگر اس خطرے کو سنجیدہ نہ لیا گیا تو دنیا بڑی تباہی سے دوچار ہو جائے گی۔”

یہ بھی پڑھیں:‌ بھارتی معاشرے میں عدم برداشت کی انتہاء، ایک بالٹی پانی کے لیے خاتون کو قتل کر دیا گیا

اپنا تبصرہ بھیجیں